پاکستان

مریم نواز سے 1400 کینال اراضی کا ریکارڈ مانگ لیا گیا

جمعہ کو قومی احتساب بیورو (نیب) نے رائے ونڈ میں 200 ایکڑ اراضی کی غیرقانونی منتقلی سے متعلق کیس میں پاکستان مسلم لیگ نواز کی نائب صدر مریم نواز کو کو طلب کیا ہے۔

نیب نے مسلم لیگ (ن) کی رہنما کو سوال نامہ  بھیجا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ زمین کس طرح خریدی گئی اور اسے زراعت یا تجارتی کس مقصد کے لئے استعمال کیا گیا۔

یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ اینٹی گرافٹ باڈی نے جمعرات کو مریم نواز کو 11 اگست کو اس کے سامنے پیش ہونے کی ہدایت کی تھی اور آج انہیں سمن جاتی عمرہ میں رہائش گاہ بھیج دیا گیا ہے۔

 ۔200ایکڑ پر مشتمل پراپرٹی 2014 میں مریم نواز کے نام پر منتقل کی گئی تھی جبکہ 100 کنال سابق وزیر اعظم نواز شریف اور سابق وزیر اعلی پنجاب شہباز شریف ، مریم کے والد اور چچا کو منتقل کردی گئیں۔

معلوم ہوا ہے کہ اراضی کی منتقلی کے دوران لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی (ایل ڈی اے) کے قواعد و ضوابط کو نظرانداز کیا گیا تھا۔ مزید برآں ، شریف خاندان کے علاقے کے چاروں طرف تعمیرات روکنے کے لئے پراپرٹی کو گرین لینڈ قرار دیا گیا تھا۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button