پاکستان

توشہ خانہ کیس میں نواز شریف اشتہاری قرار آصف زرداری اور یوسف رضا گیلانی پر فرد جرم عائد

کراچی(ویب ڈیسک)احتساب عدالت نے بدھ کے روز توشہ خانہ ریفرنس میں پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف علی زرداری اور سابق وزیر اعظم (یوسف رضا گیلانی) پر فرد جرم عائد کردی ہے۔

کارروائی کے دوران عدالت نے پاکستان مسلم لیگ نواز (مسلم لیگ ن) کے قائد اور سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کو ان کی مسلسل عدم موجودگی پر مجرم قرار دے دیا ہے۔

عدالت نے سات دن میں نواز شریف کی جائیدادوں کا ریکارڈ بھی طلب کیا ہے اور ان پر قبضہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ادھر نیب کے گواہوں کو بھی اگلی سماعت میں طلب کیا گیا ہے۔

سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے یوسف رضا گیلانی نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے رہنماؤں نے کبھی کوئی غیر قانونی کام نہیں کیا۔ میں نے عدالت کو بتایا ہے کہ سمری قانون کے مطابق منظور کی گئی تھی اور حکام کو غلط استعمال نہیں کیا گیا تھا۔

یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ نیب نے سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی سے غیر قانونی راستوں سے کاریں حاصل کرنے کا الزام آصف علی زرداری اور نواز شریف پر لگایا تھا۔

نیب پراسیکیوٹر نے بتایا کہ زرداری نے اپنے جعلی کھاتوں کا استعمال کرکے صرف 15 فیصد کاروں کی قیمت ادا کی تھی ، تاہم ، لیبیا اور متحدہ عرب امارات نے بھی انہیں کاریں تحفے میں دی تھیں جب وہ صدر کے عہدے پر فائز تھے۔

نیب کے عہدے دار نے دعوی کیا کہ آصف علی زرداری نے ان کاروں کو توشہ خانہ میں بھیجنے کے بجائے اپنے ذاتی کام کے لئے استعمال کیا۔

اینٹی کرپشن واچ ڈاگ کے نمائندے نے بتایا کہ 2008 میں نواز شریف کو کسی درخواست کے بغیر کار ملی جب وہ عوامی عہدے پر فائز نہیں تھے۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button