پاکستان

نئے آئی جی پنجاب اور نئے سی سی پی او کی تقرری کے خلاف لاہور ہائیکورٹ میدان میں آگئی ،کیس میں نیا رخ

لاہور (ویب ڈیسک)لاہور ہائیکورٹ نے نئے انسپکٹر جنرل (آئی جی) انعام غنی اور لاہور کیپیٹل سٹی پولیس آفیسر (سی سی پی او) عمر شیخ کی تقرری کے خلاف پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل ن) کی درخواست جمعرات کے روز سماعت کے لئے مقرر کردی ہ

مسلم لیگ (ن) کے رہنما ملک احمد خان نے لاہور ہائیکورٹ درخواست دی اور کہا کہ حکومت نے سیاسی مقاصد کے لئے پنجاب آئی جی کو تبدیل کردیا ہے۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ یہ اقدام پولیس آرڈیننس 2002 کے خلاف بھی ہے جس نے پنجاب آئی جی کی مدت تین سال کے لئے مقرر کی ہے۔

درخواست میں بتایا گیا ہے کہ حکومت نے صرف دو سالوں میں پنجاب میں پانچ آئی جی تبدیل کردیئے ہیں۔ لاہورہائیکورٹ سے پنجاب کے سابق آئی جی شعیب دستگیر کے تبادلے اور عمر شیخ کی بطور نیا سی سی پی او تقرری کالعدم قرار دینے کی درخواست کی گئی ہے۔

وفاقی اور صوبائی حکومتوں ، نئے آئی جی پنجاب انعام غنی ، شعیب دستگیر ، عمر شیخ اور سابق لاہور سی سی پی او کو اس معاملے میں فریق بنایا گیا ہے۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button