پاکستان

کورونا وائرس وبائی مرض: کراچی ، اسلام آباد ، آزاد کشمیر میں منی اسمارٹ لاک ڈاؤن نافذ

کورونا وائرس کے متعدد واقعات میں اضافے کے بعد اتوار کے روز منی سمارٹ لاک ڈاؤن کو کراچی ، اسلام آباد اور آزاد کشمیر میں دوبارہ نافذ کردیا گیا ہے۔

وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقیات اسد عمر نے کہا ہے کہ گذشتہ ہفتے کے مقابلہ میں کورونا وائرس کیسوں میں دو فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ مقامی انتظامیہ کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اس مہلک بیماری کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے حفاظتی اقدامات کو یقینی بنائیں۔

اسلام آباد میں ، معیاری آپریٹنگ طریقہ کار (ایس او پیز) کی خلاف ورزی کرنے پر تین سیکٹرز ، دو اسکولوں ، 32 ریستوراں اور 47 دکانوں کی مختلف گلیوں کو بھی سیل کردیا گیا ہے۔

ادھر ، لاہور میں ، ایم ایم عالم روڈ پر واقع دو شاپنگ مالز بند کردیئے گئے ہیں۔

دوسری طرف ، پاکستان میں کورونا وائرس کے ذریعے گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 12 اموات کی اطلاع ملی ہے کیونکہ پازیٹو واقعات کی تعداد بڑھ کر 318،932 ہوگئی ہے۔ ملک بھر میں ہلاکتوں کی تعداد 6،570 ہوگئی ہے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر (این سی او سی) کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق 24 گھنٹوں میں 666 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوگئی ہے۔

وبائی مرض سے سندھ بدترین متاثرہ صوبہ ہے ، جس کے بعد پنجاب ، خیبر پختونخوا اور اسلام آباد ہیں۔

اب تک سندھ میں 140،131 کورونا وائرس کیسز کی تصدیق ہوچکی ہے ، پنجاب میں 100،687 ، خیبرپختونخوا میں 38،329 ، اسلام آباد میں 17،296 ، بلوچستان میں 15،520 ، آزاد کشمیر میں 3،045 اور گلگت بلتستان میں 3،924

مزید برآں ، سندھ میں 2،549 افراد وبائی امراض کی وجہ سے ، پنجاب میں 2،257 ، خیبر پختونخواہ میں 1،263 ، بلوچستان میں 146 ، اسلام آباد میں 188 ، جی بی میں 89 اور آزاد کشمیر میں 78 افراد اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔

پاکستان نے اب تک پچھلے 24 گھنٹوں میں 3،857،845 کورونا وائرس ٹیسٹ اور 28،893 ٹیسٹ کروائے ہیں۔ ملک میں کورون وائرس کے 303،458 مریض ٹھیک ہوگئے ہیں جبکہ 483 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button