پاکستان

توشہ خانہ کیس: نواز شریف کو طلب کرنے کا نوٹس ان کی رائے ونڈ کی رہائش گاہ پر چسپاں

توشہ خانہ کیس میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے قائد اور سابق وزیر اعظم نواز شریف کو طلب کرنے کا نوٹس آج (پیر) کو رائے ونڈ کی رہائش گاہ پر چسپاں کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو (نیب) نے پولیس افسران کی مدد سے یہ نوٹس جاتی عمرا میں لگوایا ہے۔

طلبی میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف جان بوجھ کر کیس کی سماعتوں کو چھوڑ رہے ہیں۔ تاہم ، انہیں آخری موقع دیا گیا ہے کہ وہ عدالت میں پیش ہوں اور 17 اگست تک اپنا بیان قلمبند کریں۔

یہاں یہ واضح رہے کہ احتساب عدالت نے توشہ خانہ کیس میں مسلسل عدم موجودگی پر سابق وزیر اعظم نواز شریف کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کیے تھے۔

قبل ازیں نیب پراسیکیوٹر کا کہنا تھا کہ آصف علی زرداری اور نواز شریف غیر قانونی راستے سے یوسف رضا گیلانی سے کاریں حاصل کرتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ زرداری نے اپنے جعلی کھاتوں کا استعمال کرکے صرف 15 فیصد کاروں کی قیمت ادا کی تھی ، تاہم ، لیبیا اور متحدہ عرب امارات نے بھی جب انہیں صدر کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے تھے تو تحفے میں دیئے۔

نیب کے عہدیدار نے الزام لگایا کہ آصف علی زرداری نے ان کاروں کو توشہ خانہ میں بھیجنے کے بجائے اپنے ذاتی کام کے لئے استعمال کیا۔

نیب کے نمائندے نے بتایا کہ 2008 میں نواز شریف کو کسی درخواست کے بغیر کار ملی جب وہ عوامی عہدے پر فائز نہیں تھے

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button