پاکستان

آن لائن گیم پب جی پر پابندی لگانی ہے یا نہیں پی ٹی اے فیصلہ کر کے بتائے ۔لاہور ہائیکورٹ

 لاہور ہائیکورٹ نے پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کو ہدایت کی ہے کہ وہ پاکستان میں پب جی پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کرے۔ ملک بھرمیں اس آن لائن ویڈیو گیم نے بہت مقبولیت حاصل کی ہے کیونکہ موبائل ڈیوائسز پر گیم آسانی سے ڈائون لوڈ ہو کر چلتی ہے۔

تاہم ، ایک شہری فیضان مقصود کی جانب سے ایک درخواست دائر کی گئی ہے جس میں اس کھیل کو گوگل پلے اسٹور سے ہٹانے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ اس کھیل کا بچوں اور ان کی شخصیات پر منفی اثر پڑا جس کے نتیجے میں پرتشدد رجحانات جنم لیتے ہیں۔ مزید برآں ، درخواست میں کہا گیا ہے کہ اس ویڈیو گیم پب جی سے بچوں کی سوچنے کی صلاحیت پر برا اثر پڑا ہے۔

جسٹس عاطر محمود کی سربراہی میں لاہور ہائیکورٹ کے ڈویژن بینچ نے درخواست کی سماعت کے بعد ، پی ٹی اے کو ہدایت کی ہے کہ وہ پاکستان میں پب جی پر پابندی لگانے کے معاملے پر چھ ہفتوں کے اندر فیصلہ دیں۔

اگر پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی اس گیم پر پابندی لگاتے دیتی ہے تو ، پاکستان اس کے گیم  خلاف ایسی کارروائی کرنے والا پہلا ملک نہیں ہوگا کیونکہ کچھ اور ممالک پہلے ہی مقبول آن لائن گیم پب جی پر پابندی عائد کر چکے ہیں۔

اردن ان ممالک میں سے ایک ہے جس نے 2019 میں پب جی پر لوگوں کے ذہنوں پر منفی اثرات مرتب کرنے پر پب جی پر پابندی عائد کی تھی جس کے نتیجے میں ملک میں اس آن لائن ویڈیو گیم پر پابندی عائد کردی گئی تھی۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button